ڈاکٹر صغیر نے متحدہ چھوڑ دی، مصطفیٰ کمال سےجا ملے

کراچی: سابق وزیر صحت سندھ ڈاکٹر صغیر احمد نے متحدہ قومی موومنٹ اور صوبائی اسمبلی کی نشست سے استعفے کا اعلان کرتے ہوئے مصطفیٰ کمال کی ‘نئی پارٹی’ میں شمولیت اختیار کرلی۔

کراچی میں مصطفیٰ کمال اور انیس قائم خانی کے ہمراہ پریس کانفرنس کے دوران صغیر احمد کا کہنا تھا کہ وہ مصطفیٰ کمال اور انیس قائم خانی کے شانہ بشانہ پاکستان کی ترقی کے لیے اپنا کردار ادا کرنا چاہتے ہیں۔

انھوں نے میڈیا کی کوششوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں سیاسی تبدیلیوں کو میڈیا نے گھر گھر پہنچایا ہے۔

پریس کانفرنس کے دوران انہوں نے سندھ اسمبلی کی رکنیت اور ایم کیوایم چھوڑنے کا اعلان کیا۔

ڈاکٹر صغیر نے اس موقع پر ان کو ووٹ دینے والوں سے معذرت کرتے ہوئے کہا کہ وہ انہیں ڈیلیور نہیں کرپارہے تھے کیوں کہ ان کی ‘ڈیوٹی’ کہیں اور لگی ہوئی تھی۔

انہوں نے کہا کہ انہیں کوئی پچھتاوا نہیں اور نہ ہی ان پر کسی قسم کا دباؤ ہے۔